مارکسی تعلیم

پرانے خاندان سے نئے خاندان تک

پرانے خاندان سے نئے خاندان تک

[تحریر: لیون ٹراٹسکی] (یہ آرٹیکل 13 جولائی 1923 ء میں ’’پراودا‘‘ میں شائع ہوا تھا۔اس کا پہلاانگریزی ترجمہ زیڈ و نجیروا (Z.Vengerove )نے کیا جو 1924 ء میں ’’زندگی کی مشکلات ‘‘میں شائع ہوا تھا)

جولائی 28, 2012 ×
قدر، قیمت اور منافع

قدر، قیمت اور منافع

’’قدر ، قیمت اور منافع‘‘ یا ’’اجرت ، قیمت اور منافع‘‘ در اصل کارل مارکس کی ان تقاریر پر مبنی ہے جو انہوں نے 20اور 27جون 1865ء کو پہلی انٹرنیشنل کی جنرل کونسل کے دو اجلاسوں میں کیں۔

جون 27, 2012 ×
سرمایہ دارانہ نظام بمقابلہ سائنس

سرمایہ دارانہ نظام بمقابلہ سائنس

تحریر:مائیک پیلیسک:- (ترجمہ :اسدپتافی) ایک تواتر و تسلسل کے ساتھ، اٹھتے بیٹھتے ہم پر یہ ہو شربا راز آشکارکیاجاتاہے کہ سرمایہ دارانہ نظام‘ٹیکنالوجی، ایجادات کو نہ صرف آگے بڑھاتا ہے بلکہ سائنسی ترقی کو بھی دن دوگنی رات چوگنی ترقی دینے میں محواور مگن چلاآرہاہے۔

جون 16, 2012 ×
سروینٹیز کے شاہکار ناول ڈان کیخوٹے کی 400ویں سالگرہ پر لکھی گئی ایلن ووڈز کی خصوصی تحریر، دوسرا اور آخری حصہ

سروینٹیز کے شاہکار ناول ڈان کیخوٹے کی 400ویں سالگرہ پر لکھی گئی ایلن ووڈز کی خصوصی تحریر، دوسرا اور آخری حصہ

تحریر : ایلن ووڈز:- (ترجمہ : آدم پال) تغیر کا دور ’’مارکس سروینٹیز اور بالزاک کو باقی تمام ناول نگاروں سے زیادہ پسند کرتا تھا۔ ڈان کیخوٹے میں اسے پرانی رسمی شجاعت آخری سانسیں لیتی ہوئی نظر آئی جس کا ابھرتے ہوئے بورژوا سماج میں مذاق اْڑایا جاتا تھا۔‘‘

جون 8, 2012 ×
سروینٹیز کے شاہکار ناول ’’ ڈان کیخوٹے‘‘ کی 400ویں سالگرہ پر ایلن ووڈز کی خصوصی تحریر، پہلا حصہ

سروینٹیز کے شاہکار ناول ’’ ڈان کیخوٹے‘‘ کی 400ویں سالگرہ پر ایلن ووڈز کی خصوصی تحریر، پہلا حصہ

تحریر : ایلن ووڈز:- (ترجمہ : آدم پال) اس سال ڈان کیخوٹے،اسپین کے ادب کی عظیم ترین تخلیق، کی پہلی اشاعت کو 400برس ہو گئے ہیں۔محنت کش طبقہ، یعنی وہ طبقہ جو ثقافت کے تحفظ میں سب سے زیادہ دلچسپی رکھتا ہے، اسے اس سالگرہ کوجوش وخروش سے منانا چاہیے۔

جون 1, 2012 ×
کمیو نزم میں ’’بائیں بازو‘‘ کی طفلانہ بیماری

کمیو نزم میں ’’بائیں بازو‘‘ کی طفلانہ بیماری

ولادیمیر لینن نے یہ کتاب 1920ء میں تحریر کی اور اسی سال شائع ہوئی۔1920ء میں ہی ہونے والی کامینٹرن کی دوسری عالمی کانگریس میں موجود ہر ڈیلیگیٹ کو اس کتاب کا ایک نسخہ پیش کیا گیا۔

مئی 21, 2012 ×
مارکسسٹ انفرادی دہشت گردی کی مخالفت کیوں کرتے ہیں؟

مارکسسٹ انفرادی دہشت گردی کی مخالفت کیوں کرتے ہیں؟

تحریر: لیون ٹراٹسکی (1909) (ترجمہ: آدم پال) ہمارے طبقاتی دشمنوں کو اکثرہماری دہشت گردی کی شکایت رہتی ہے ۔ ان کا مطلب ابھی تک غیر واضح ہے۔ وہ چاہیں گے کہ پرولتاریہ کے طبقاتی دشمنوں کے مفادات کے خلاف تمام سرگرمیوں کو دہشت گردی قرار دیں۔

مئی 18, 2012 ×
فن اور طبقاتی جدوجہد

فن اور طبقاتی جدوجہد

کچھ حضرات کا خیال ہے کہ فن ایک ضمنی سامعاملہ ہے اور زیادہ اہم نہیں ہے۔ لیکن حقیقت میں یہ انسانوں کے لئے انتہائی بنیادی نوعیت کاحامل ہے۔

مئی 15, 2012 ×
منٹو کی 100ویں سالگرہ؛ منٹو کا مسخ شدہ وژن

منٹو کی 100ویں سالگرہ؛ منٹو کا مسخ شدہ وژن

تحریر: ابن حسن:- ریڈیکل ہونے کا مطلب ہے چیزوں کو جڑ سے پکڑنا؛ تاہم انسانیت کی جڑ خود انسان ہے (مارکس)

مئی 12, 2012 ×
مارکس ازم کے تین سرچشمے اورتین اجزاے ترکیبی

مارکس ازم کے تین سرچشمے اورتین اجزاے ترکیبی

تحریر: ولادیمیر لینن(1913ء) تمام متمدن دنیا میں مارکس کی تعلیمات سے بورژوا علم (سرکاری بھی اور اعتدال پسند بھی) بھڑکتا ہے اور سخت عداوت رکھتا ہے۔ اس کی نظر میں مارکس ازم کیا ہے، ایک ’’مہلک فرقہ‘‘۔

مئی 7, 2012 ×
سوشلزم کیوں؟

سوشلزم کیوں؟

تحریر ۔البرٹ آئن سٹائن:- کیا یہ اس شخص کے لیے سوشلزم کے موضوع پر اپنے خیالات کا اظہارکرنامعقول بات ہے جو معاشی اور سماجی مسائل کاماہر نہیں، ؟ میرے نزدیک اس کی وجوہات یہ ہیں۔

اپریل 24, 2012 ×
جدلیاتی مادیت کا پہلا سبق

جدلیاتی مادیت کا پہلا سبق

تحریر: لیون ٹراٹسکی:- (مترجم: جاوید شاہین) جدلیات نہ تو فکشن ہے اور نہ ہی تصوف۔ اگر اسے زندگی کے عام مسائل تک محدود نہ رکھا جائے تو یہ ایک سائنس ہے جس کے ذریعے پیچیدہ اور طویل اعمال کو سمجھا جا سکتا ہے۔

اپریل 21, 2012 ×
مارکسزم اور ڈارونزم

مارکسزم اور ڈارونزم

’’جس قسم کی اقدارکی پاسداری مارکسٹ نظریہ کرتاہے وہ ان سے تقریباً بالکل الٹ ہیں جو ہمارے موجودہ سائنسی طرزفکر سے سامنے آتی ہیں۔‘‘

اپریل 18, 2012 ×
انقلاب کا سالماتی عمل

انقلاب کا سالماتی عمل

(The Molecular Process of Revolution) کیمیائی ردعمل کے وقوع پذیر ہونے میں ایک ایسا فیصلہ کن مرحلہ آتا ہے جسے عبوری حالت کہتے ہیں۔

مارچ 27, 2012 ×
انقلابی مارکسزم تاریخ کے آئینے میں

انقلابی مارکسزم تاریخ کے آئینے میں

تحریر:وقار احمد:- کسی بھی نظریئے کی تخلیق ،ترتیب اور ترقی کے لیے لازمی ہے کہ مروجہ سماج کے سیاسی ،معاشی اقتصادی ،سماجی اور موضو عی تضادات اور ان کے نتیجے میں جنم لینے والے واقعات کی فلسفے کی مدد سے توضیح اور تشریح کی جائے۔

مارچ 23, 2012 ×